26

وزیراعظم یوم آزادی پر آزاد کشمیر کی قانون ساز اسمبلی سے خطاب کریں گے | پاکستان

وزیراعظم عمران خان بھارتی اقدام کو سلامتی کونسل میں لیجانے کا اعلان بھی کر چکے ہیں۔ فوٹو: فائل

وزیراعظم عمران خان یوم آزادی کے موقع پر کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لیے آزاد کشمیر کی قانون ساز اسمبلی سے خطاب کریں گے۔

بھارتی حکومت کی جانب سے مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت سے متعلق آرٹیکل 370 ختم کیے جانے کے بعد سے مقبوضہ وادی میں کرفیو نافذ ہے۔

قابض بھارتی حکمرانوں نے جموں و کشمیر میں ٹیلی فون، موبائل اور انٹرنیٹ سروس بند کر رکھی ہے جب کہ وادی کے تمام تعلیمی ادارے بھی بند اور سینکڑوں کشمیری رہنما گھروں میں نظر بند یا گرفتار ہیں۔

مقبوضہ کشمیر میں کرفیو کے باوجود ہزاروں کشمیریوں نے گھروں سے باہر نکل کر مودی سرکار کے اقدامات کے خلاف مظاہرے کیے۔

حکومت پاکستان نے بھارتی اقدامات کے فیصلے کو یکسر مسترد کرتے ہوئے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل سے واقعے کا نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔

اب حکومت پاکستان کی جانب سے سوشل میڈیا پر جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ وزیراعظم عمران خان کل یوم آزادی کے موقع پر مظفرآباد جائیں گے اور آزاد کشمیر کی قانون ساز اسمبلی سے خطاب کریں گے۔

قبل ازیں چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری نے وفاقی حکومت کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا تھا کہ آزاد کشمیر پہنچ کر پتہ چلا کہ انہوں نے وزیراعظم عمران خان کو کشمیر کے پارلیمان سے خطاب کی دعوت دی تھی لیکن 2 دن تک انتظار ہوتا رہا مگر وزیراعظم کشمیر گئے ہی نہیں۔



Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں